1,039

راولپنڈی گڈز کیرئیر ایسوسی ایشن گنجمنڈی کا چیف ٹریفک آفیسر راولپنڈی کے خلاف احتجاج

راولپنڈی (سی این پی ) راولپنڈی گڈز کیرئیر ایسوسی ایشن گنجمنڈی کا ہنگامی جنرل باڈی کا اجلاس ہوا جس میں چیف ٹریفک آفیسر راولپنڈی کے خلاف ایل ٹی وی گاڑیوں کے بھاری بھرکم چلان کرنے کے حکم کیخلاف اور ان گاڑیوں پر بیجا پابندی لگانے پر احتجاج کیا عہدیداران کا کہنا تھا کہ اس مسئلے پر 7 ماہ پہلے اس وقت کے چیف ٹریفک آفیسر رائے مظہر اقبال کیساتھ میٹنگ ہوئی تھی جس پر چیف ٹریفک آفیسر راولپنڈی رائے مظہر اقبال نے تین رکنی کمیٹی تشکیل دی تھی جس میں ڈی ایس پی سٹی ،ڈی ایس پی نیو ٹاؤن ،اور ڈی ایس پی ہیڈ کوارٹر ٹریفک پر مشتمل تھی جو ان مسائل کو حل کرے گی اور ٹرانسپورٹرز کے بیجا چالان نہیں کئے جائیں گے لیکن 7 ماہ کا عرصہ گزرنے کے باوجود اس کمیٹی نے کوئی کام نہیں کیا اور مزدا گاڑیوں کے چالان کا سلسلہ بدستور جاری ہے




اور فی گاڑی 3 ہزار روپے جرمانہ کیا جا رہا ہے اور معاشی قتل عام کیا جا رہا ہے گاڑیوں کی ٹائمنگ مختص کرنا ہمارے ساتھ بہت بڑا ظلم ہے پورے پاکستان میں کہیں بھی ایل ٹی وی گاڑیوں پر پابندی نہیں لیکن راولپنڈی ٹریفک پولیس کے اس ظالمانہ اقدام کو کوئی روکنے والا نہیں پاکستان میں جاری مہنگائی کے اس طوفان میں گڈز ٹرانسپورٹرز کیساتھ یہ ظلم و ذیادتی بند کی جائے پہلے ہی ہم مہنگائی کے ہاتھوں پس رہے ہیں اور ٹریفک پولیس اہلکاروں نے بیجا تنگ کرنا معمول بنا لیا ہے اور فی گاڑی 3 ہزار روپے بلاوجہ چالان کئے جا رہے ہیں راولپنڈی گڈز کیرئیر ایسوسی ایشن کے اجلاس میں محمد شکیل قریشی صدر ،میاں فیاض افضل گروپ لیڈر،جنرل سیکرٹری صداقت حیدر،سردار امتیاز علی ،راجہ سلیم محمود ،سردار اختر،چوہدری جاوید نے شرکت کی اور راولپنڈی ٹریفک پولیس کے غیر منصفانہ رویہ،اور ایل ٹی وی گاڑیوں کے بھاری بھرکم چالان ،اور گاڑیوں پر ٹائمنگ کی پابندی کے خلاف احتجاج کیا اور کمشنر راولپنڈی ،ڈپٹی کمشنر راولپنڈی،




سی پی او راولپنڈی سمیت نئے تعینات ہونے والے چیف ٹریفک آفیسر راولپنڈی تیمور خان سے اپیل کی ہے کہ ایل ٹی وی گاڑیوں پر سے پابندی اٹھائی جائے اور بھاری بھرکم چالان کا سلسلہ بند کیا جائے اجلاس کے بعد ایسوسی ایشن کے عہدیداران ،اور ممبران نے ٹریفک پولیس راولپنڈی کے خلاف تھانہ گنجمنڈی کے سامنے احتجاج کیا اور انتظامیہ کو ایک ہفتہ کی مہلت دیتے ہوئے کہا کہ اگر ہمارے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کا ازالہ نا کیا گیا تو پہیہ جام ہڑتال سمیت روڈ پر احتجاج کرنے کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔۔۔۔۔۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں