1,058

راولپنڈی کے مشہور بازاروں میں رش اور نا جائز تجاوزات کی بھر مار: عوام کاشاپنگ کرنا مشکل

راولپنڈی (ریحان احمد) راولپنڈی شہر کے مشہور بازاروں میں ناجائز تجاوزات کی بھر مار کو روکنے کے لیے میٹروپولیٹن کی ٹیم نے اقبال روڈ، بوہڑ بازار، تلواراں بازار،نمک منڈی،باڑہ بازار، سٹی صدر روڈ، راجہ بازاراور اس سے ملحقہ تنگ بازاروں میں کامیاب اپریشن شروع کر دیا۔
میٹروپولیٹن کی ٹیم کا کہنا ہے کہ وہ روڈ کے کنارے دکانداروں کی ناجائز تجاوزات کو فوری طور پر ہٹارہے ہیں ۔ اس کے ساتھ ساتھ دکانداروں کو نوٹس بھی دیے جارہے ہیں کہ وہ اپنی دکان کے سامنے روڈ پر ناجائز تجاوزات مت رکھیں۔ تاکہ لوگ اسانی سے پید ل چل سکیں۔ اور ٹریفک کی روانی میں بھی نہ خلل آئے۔




نا جائز تجاوزات کو کنٹرول کرنے والی ٹیم کا کہنا ہے کہ وہ پیدل چلنے والوں کو اور خصوصا خریداروں کو سخت پریشانی سے بچانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ٹریفک کی روانی کو بہتر رکھنے کے لیئے۔ ضروری ہے کہ بازار کے روڈ خالی ہوں۔تاکہ آمدورفت میں آسانی ہو۔
جبکہ دکانداروں کو کہنا ہے کہ اگر وہ چیزوں کی نمائش نہیں کریں گے تو گاہک دکان کے اندر نہیں آتا۔ اور عوام کاردِ عمل یہ ہے کہ ان کو علم میں ہے کہ کونسی چیز کہاں سے ملتی ہے۔ ان کو بازار میں آنے اور جانے کی آسانی ہونی چاہیے۔
خاص کر راجہ بازار میں خواتین کا رش دیکھنے کو ملتا ہے جو روزمرہ کی اشیا ء جن مے بچوں کے جوتے ، کپڑے، سویٹر، جرسیاں، جرابیں ، جیولیری ، برتن کی خریدوفروخت میں مصروف نظر آتی ہیں اور روڈ پر ایک لمبی لائن لگی ہوتی ہے۔ اور روڈپر سٹال لگے ہوئے ہیں۔جو رکاوٹ کا باعث بنتے ہیں۔




جبکہ باڑہ مارکیٹ سردی ہو یا گرمی عوام سے کھچا کھچ بھری ہوئی نظر آتی ہے۔اس کے رش میں کبھی کمی نہیں ہوتی۔ یہ ہی حال اقبال روڈ کا ہے۔ چنگ چی رکشہ کی بھر مار اور بے ھنگم ٹریفک ایک عذاب سے کم نہیں۔ پٹھان بھائیوں نے مختلف اشیا کی ریڑھیاں روڈ پر کھڑی کر رکھی ہیں۔ جس کی وجہ سے ٹریفک کی روانی میں مسئلہ پیدا ہوتا ہے۔ٹریفک کی موبائل ٹیم سائرن بجا بجا کر ٹریفک کو کنٹرول کرنے میں لگی رہتی ہیں۔ لیکں ان کی کوئی سنتا نہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں