1,067

ایپسما اور اکیڈمیزایسوسی ایشنز کے رہنماؤں کے خلاف ایف آئی آر فوری طور پر خارج کریں۔ ابرار احمد خان

راولپنڈی ( سی این پی )آل پاکستان پرائیویٹ سکولز مینجمنٹ ایسوسی ایشن کے مرکزی صدر کاشف ادیب جاودانی اور اکیڈمیز ایسوسی ایشن کے رہنماؤں کے خلاف درج ایف آئی آر فوری طور پر خارج کی جائے۔ حقوق کے لیے آواز بلند کرنا ہمارا آئینی حق ہے۔ ان خیالات کا اظہار راولپنڈی ڈویژن کے صدر صدر ابرار احمد خان، محمد فرقان چوہدری، اعجاز خان کا کڑ،میاں محمد اویس کاٹھیا،ابرارالحق شاکر، محمد حسنین، نذیر احمد،حفیظ اللہ ملک،مشتاق حیدر، نثار احمد،قاضی نور الحسن، ابرار احمد ایڈوکیٹ مسز سکینہ تاج نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ




17دسمبر کو ایپسما کی طرف سے لاہور مال روڈ پر تعلیمی ادارے کھلوانے کے حوالے سے نکالی جانے والی پرامن احتجاجی ریلی کے نتیجے میں ایپسما کے مرکزی صدر کاشف ادیب جاودانی اور اکیڈمیز ایسوسی ایشنز کے 15 رہنماؤں کے خلاف تھانہ انار کلی لاہور میں ایف آئی آر درج کی گئی تھی۔ آج عدالت میں پیشی تھی اس موقع پر کاشف ادیب جاودانی کے ہمراہ کا اعجاز خان کاکڑ، میاں اویس کاٹھیا اور اکیڈمیز ایسوسی ایشن شاہدرہ کے رہنماوّں اپنے وکلاء کے ہمراہ عدالت میں




عبوری ضمانت میں توسیع کے لیے پیش ہوئے۔ عدالت نے عبوری ضمانت کی توسیع میں 25جنوری تک توسیع دے دی ہے۔ اس موقع پر انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ان کا جرم صرف اتنا ہے کہ انہوں نے تعلیمی اداروں کے حقوق کے لیے پرامن انداز میں آواز بلند کی ہے۔ اور میں نجی تعلیمی اداروں کے مسائل کے لئے ہر فورم پر آواز اٹھاتا رہوں گا۔ ابرار احمد خان نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ ایپسما اور اکیڈمیزایسوسی ایشنز کے رہنماؤں کے خلاف ایف آئی آر فوری طور پر خارج کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں