1,031

شاہ سلیمان کے فلاحی ادارے کی طرف سے پاکستان کے پسماندہ اضلاع کے یتیم بچوں کے لیے ”ونٹر ریلیف پیکج

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)پاکستان اور سعودی عرب کے مابین برادارنہ تعلقات اپنی مثال آپ ہیں ، سعودی حکومت نے ہمیشہ ہی پاکستان کے عوام ا کی فلاح و بہبود کا فریضہ احسن طریقے سے نبھایا ہے ، دونوں ممالک عرصہ دراز سے اخوت و بھائی چارے کے اٹوٹ رشتوں سے جڑے ہیں ،سعودی فرمانروا شاہ سلیمان نے بھی مشکل گھڑی میں ہمیشہ پاکستان کے عوام کی بھرپور سرپرستی کی ہے۔ا ن خیالات کا اظہارمعروف پتھالوجسٹ ڈاکٹر جمال ناصر نے شاہ سلیمان کے فلاحی ادارےKing Sulman Hummanitarian Aid and Releif Centre کی طرف سے پاکستان کے پسماندہ اضلاع کے یتیم بچوں کے لیے ”ونٹر ریلیف پیکج ”رابطہ عالم اسلامی پاکستان کے حوالے کئے جانے کے سلسلے میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔تقریب میں کنگ سلیمان ہیومین ٹیرینزایڈ اینڈ ریلیف سنٹرکے ڈائریکٹرعبداللہ براق کی طرف سے پاکستان کے پسماندہ علاقوں کے1050 یتیم بچوں کے لئے”ونٹر ریلیف پیکج ”رابطہ عالم اسلامی پاکستان کے ڈائریکٹر جنرل سعد مسعود الحارثی کے حوالے کیا گیا ،جن کی نگرانی میں یتیم بچوں کو بروقت سردی سے بچانے کے لیے مذکورہ پیکج کی تقسیم کا عمل مکمل کیا جائے گا۔اس موقع پر جاوید بٹ و دیگر بھی موجود تھے ۔ ڈائریکٹر جنرل سعد مسعود الحارثی نے کہا کہ پاکستانی بھائیوں کی فلاح و بہبود سعودی حکومت کی اولین ترجیح ہے ۔عبداللہ براق نے اس موقع پر بتایا کہ ہمارا یہ پیکج 21500ونٹر ریلیف پیکج کا حصہ ہے جو کہ گذشتہ ماہ خیبر پختونخوا میں تقسیم کیا جا چکا ہے ،یوں ہمارے ریلیف پیکج کی مجموعی تعداد 22550ہو جائے گی ۔اس ریلیف پیکج میں 45100رضائیاں جبکہ 22550کِٹس مردانہ و زنانہ شالوں،بچوں اور بڑوں کے لیے گرم ملبوسات پر مشتمل تھیں ،اس پیکج کی مجموعی لاگت 20کروڑ روپے سے زائدیعنی1,258,164ملین ڈالر ہے جو کہ NDMA، حکومت خیبر پختونخوا اور پاکستان کی غیر سرکاری تنظیم کے تعاون سے ضلع چترال ، سوات اور شانگلہ کی سرد ترین یونین کونسلزمیں نہایت منظم اور شفاف طریقے سے تقسیم کیا جا چکا ہے ،اس پیکج سے مجموعی طور پر 135,300افراد مستفید ہوئے ہیں ۔اور ہمارا یہ پروگرام آئندہ بھی جاری رہے گا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں