1,115

پنجاب پولیس اورپنجاب یونیورسٹی میں تعلیم و تحقیق کے شعبہ میں تعاون کے فروغ پر مفاہمتی یادداشت پر دستخط

لاہور ( سی این پی ) ‌ -انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب انعام غنی نے کہاہے کہ تعلیم و تحقیق کے شعبے میں فروغ اور انتظامی،سماجی و معاشرتی مسائل کے حل کے لیے متعلق نئی پالیسییز بنانے کیلئے یونیورسٹیوں، کالجز اور سرکاری و نجی اداروں کا باہمی تعاون وقت کی اہم ضرورت ہے کیونکہ انفارمیشن شئیرنگ اور باہمی کوارڈی نیشن سے درپیش چیلنجز کی نشاندہی کے ساتھ انکے حل کیلئے لائحہ عمل کی تیاری آسان سے آسان ہو جاتی ہے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ اسی مقصد کے تحت پنجاب پولیس طلباو طالبات کو عملی تجربہ اور سیکھنے کے مواقع فراہم کرنے کیلئے بہت جلد انٹرن شپ پروگرام شروع کررہی ہے جس کے تحت یونیورسٹی طلبا کو اپنے پراجیکٹس کے تحقیقی مقاصد کیلئے آٹھ ہفتوں کیلئے پولیس کے مختلف دفاتر میں ریسرچ اور انٹرن شپ کا موقع فراہم کیا جائے گا تاکہ وہ نہ صرف دفتری امور کے متعلق آگاہی حاصل کریں بلکہ آپریشنل طریقہ کار میں بہتری کے حوالے سے اپنے مشاہدے کی بنا پر سفارشات اور تجاویز بھی دیں۔ انہوں نے مزیدکہاکہ پنجاب پولیس عوام کی جان وما ل کے تحفظ، جرائم کی روک تھام کے ساتھ ساتھ بطور ادارہ اپنی سماجی ذمہ داریوں سے بھی پوری طرح آگا ہ ہے اور اس سلسلے میں متعلقہ اداروں کے ساتھ دو طرفہ تعاون اور تبادلوں کے پروگرام کو مزید بڑھایا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج سنٹرل پولیس آفس میں وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹرنیاز احمد اختر کی قیادت میں آئے وفد کے ساتھ ملاقات کرتے ہوئے کیا۔ا س موقع پر پنجاب پولیس کی ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ برانچ اورپنجاب یونیورسٹی کے انسٹیٹیوٹ آف سوشل اینڈ کلچرل سٹڈیز کے مفاہمتی یادداشت (ایم او یو) بھی سائن ہوا جس کا مقصد پنجاب پولیس کی شواہد پر مبنی خدمات میں بہتری لانا اور اس کے اقدامات کو تحقیقی بنیادوں پر استوار کرنا ہے۔پنجاب پولیس کی جانب سے آئی جی انعام غنی جبکہ وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹرنیاز احمد اخترنے مفاہمتی یادداشت پر دستخط کئے۔



تقریب میں پنجاب یونیورسٹی کے وفد نے آئی جی پنجاب کو بتایاکہ پنجاب پولیس اوریونیورسٹی کے مابین کریمنالوجی پروگرام میں تدریسی تعاون کیلئے ہیومن ریسورس کا اشتراک کیا جائیگا اور محکمہ پولیس کے مختلف دفاتر میں پنجاب یونیورسٹی کے طلباء کے مطالعاتی دوروں کا انتظام کیا جائیگا۔ انہوں نے مزیدکہاکہ کریمنالوجی کے ڈگری پروگرام میں زیر تعلیم طلبا تحقیق کے ذریعے چیلنجزکی نشاندہی اور ان مسائل کا حل بھی پیش کریں گے جبکہ پنجاب یونیورسٹی ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ پنجاب پولیس کو وقت ضرورت تحقیقی سرگرمیوں میں تکنیکی مدد فراہم کرے گی۔وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر نیاز احمد اختر نے پنجاب پولیس کے ساتھ ایم او یو کو سراہتے ہوئے کہا کہ پنجاب پولیس چیلنجنگ ماحول میں بھی لوگوں کی حفاظت اور خدمت کے فرائض جانفشانی سے سر انجام دے رہی ہے صوبے میں امن و امان کے قیام اور جرائم کی روک تھام میں پنجاب پولیس کی کاوشیں قابل ستائش ہیں۔ اس موقع پر ایڈیشنل آئی جی ٹریننگ کنور شاہ رخ،ایڈیشنل آئی جی آر اینڈ ڈی غلام رسول زاہد، ایڈیشنل آئی جی آپریشنز صاحبزادہ شہزاد سلطان، ڈی آئی جی آر اینڈ ڈی، ٹریننگ ڈاکٹر سلیمان سلطان رانا، ڈی آئی جی ہیڈ کوارٹر سید خرم علی، ڈائریکٹر انسٹیٹیوٹ آف سوشل اینڈ کلچرل اسٹڈیز ڈاکٹر روبینہ ذاکر، ڈاکٹر ثوبیہ خرم اور کوارڈینیٹرکریمنالوجی ڈیپارٹمنٹ ڈاکٹر محمد رمضان سمیت دیگر افسران موجود تھے۔ تقریب کے اختتام پر آئی جی پنجاب نے وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی کو پنجاب پولیس کی یادگاری شیلڈبھی دی۔
٭٭٭٭٭٭

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں